184

امریکا مڈٹرم الیکشن : ڈیموکریٹس کی ایوان نمائندگان میں دوبارہ برتری

امریکہ میں وسط مدتی انتخابات میں ڈیموکریٹس نے ایوان نمائندگان میں دوبارہ برتری حاصل کرلی ہے جبکہ ری پبلکنز کوسینیٹ میں سبقت حاصل ہے۔سینیٹ میں ری پبلکنز نے 51جبکہ ڈیموکریٹس نے صرف44 نشستیں حاصل کی ہیں۔

تازہ ترین رپورٹس کے مطابق ایوان نمائندگان میں ڈیموکریٹس نے دوسوبائیس جبکہ ری پبلکنز نے ایک سوننانوے نشستیں حاصل کی ہیں۔

ایوان بالا میں کُل سینیٹرز کی تعداد 100 ہے، جبکہ ہر امریکی ریاست سے 2 سینیٹرز کانگریس میں نمائندگی کرتے ہیں۔ امریکی سینیٹرز 6 سال کے لئے منتخب کئے جاتے ہیں۔ ہر صدارتی اور وسط مدتی الیکشن میں سینیٹ کے ایک تہائی اراکین کا چناؤ کیا جاتا ہے۔ کوئی بھی امیدوار کم از کم 9 سال سے امریکی شہری ہو، اس کی عمر 30 سال سے زائد ہو اور وہ اپنے حلقے کا رہائشی ہو تو امریکی کانگریس کے ایوان زیریں کی نشت کے مقابلے کے لئے اہل ہے۔

واضح رہے کہ اراکین کانگریس کو صدارتی اور وسط مدتی انتخابات دونوں میں منتخب کیا جاتا ہے۔ ریاست کی آبادی اس بات کا فیصلہ کرتی ہے کہ اس کے کتنے نمائندگان ایوان زیریں میں ہونگے۔ ہر نمائندہ ایک کانگریشنل ڈسٹرکٹ یعنی حلقے کی نمائندگی یا خدمت کرتا ہے۔ کوئی بھی امیدوار کم از کم 7 سال سے امریکی شہری ہو، اس کی عمر 25 سال سے زائد ہو اور وہ اپنے حلقے کا رہائشی ہو تو امریکی کانگریس کے ایوان زیریں کی نشت کے مقابلے کے لئے اہل ہے۔

The post امریکا مڈٹرم الیکشن : ڈیموکریٹس کی ایوان نمائندگان میں دوبارہ برتری appeared first on Newsone Urdu.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں