68

آسیہ کیس میں نظرِ ثانی ایک آئینی راستہ ہے، فواد چوہدری

لاہور: وفاقی وزیرِ اطلاعات فواد چوہدری نے کہا ہے کہ آسیہ کیس میں نظرِ ثانی ایک آئینی راستہ ہے جو متاثرہ فریق کا حق ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیرِ اطلاعات نے کہا ہے کہ آسیہ بی بی کیس میں متاثرہ فریق کا حق ہے کہ وہ فیصلے کے خلاف نظرِ ثانی کا آئینی راستہ اختیار کرے۔

آسیہ کیس میں نظرِ ثانی ایک آئینی راستہ ہے: فواد چوہدری

سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے پیغام میں وزیرِ اطلاعات نے کہا کہ نظرِ ثانی کی درخواست قانونی حق ہے جسے عدالت منظور کرتی ہے تاہم توڑ پھوڑ، ہنگامہ آرائی اور دھمکیاں ناقابلِ قبول ہیں۔

فواد چوہدری نے ٹویٹ کیا کہ کوئی بھی شخص قانون ہاتھ میں نہیں لے سکتا، وزیرِ اعظم کی ہدایت کے مطابق ریاست اپنی رٹ یقینی بنائے گی، ایسے عناصر سے سختی سے نمٹا جائے گا۔


یہ بھی پڑھیں:  کوئی خوش گمانی میں نہ رہے کہ ریاست کمزورہے، اپوزیشن اور ادارے حکومت کے ساتھ ہیں، فواد چوہدری


انھوں نے کہا کہ پاکستان ایک ایٹمی طاقت ہے، اداروں کی استطاعت اور صلاحیت کے بارے میں غلط فہمی دور کر لیں ورنہ پچھتائیں گے۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز سپریم کورٹ نے مسیحی خاتون آسیہ بی بی کی سزائے موت کالعدم قرار دیتے ہوئے انھیں بری کر دیا ہے۔

The post آسیہ کیس میں نظرِ ثانی ایک آئینی راستہ ہے، فواد چوہدری appeared first on ARYNews.tv | Urdu – Har Lamha Bakhabar.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں