85

چین میں تفتیش کے بعد انٹرپول کے سربراہ نے استعفیٰ دیدیا

بیجنگ : چین نے تصدیق کی ہے کہ انٹرپول کے لاپتا ہو جانے والے صدر کو چین میں داخل ہوتے ہی ممکنہ طور پر مجرمانہ اقدامات کی تحقیقات کیلئے حراست میں لیا گیا ہے۔ جس کے بعد انہوں نے اپنے عہدے سے استعفیٰ دیدیا ہے۔

ینگ 25 ستمبر کو فرانس کے شہر لیون سے اپنے وطن چین پہنچنے کے فوراً بعد لاپتا ہو گئے تھے۔ فرانسیسی حکام نے 5 ستمبر کو اُن کی گمشدگی کی اطلاع دی تھی۔

تاہم چینی حکام کی جانب سے اعلان کیا گیا ہےکہ انہیں بعض معاملات پر بازپرس کے لیے چین میں روکا گیا تھا۔ جس کے بعد مینگ ہونگ وائی نے اپنا استعفیٰ پیرس بھجوادیا ہے جہاں انٹرپول کاصدردفتر واقع ہے۔

واضح رہے کہ مینگ ہونگ وائی چین کے دورے پر گزشتہ ہفتے سے منظرِ عام سے غائب رہے جس کے بعد ان کے لاپتہ ہونے کے بارے میں قیاس آرائیاں کی جارہی تھیں۔  چین کے حکام کا کہنا تھا کہ  انٹرپول کے سربراہ مینگ ہونگ چینی قوانین کی خلاف ورزی کے مرتکب پائے گئے۔

خیال رہے کہ انٹرپول کے سربراہ 64 سالہ مینگ ہونگوی کا تعلق چین سے ہے اور وہ نومبر 2016 میں انٹرپول کے صدر منتخب ہوگئے تھے۔ مینگ کا انصاف فراہم کرنے والے اداروں میں کام کرنے کا 40 سالہ تجربہ ہے۔

The post چین میں تفتیش کے بعد انٹرپول کے سربراہ نے استعفیٰ دیدیا appeared first on Newsone Urdu.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں