205

رافیل طیارہ اسکینڈل: اپوزیشن کا نریندر مودی سے استعفے کا مطالبہ

ممبئی : بھارتی وزیراعظم نریندر مودی اربوں روپوں کی کرپشن کے اسکینڈل میں پھنس گئے، فرانس سے رافیل طیارے خریدنے کا تنازع سامنے آگیا۔

بھارتی میڈیا کے مطابق 2016 میں بی جے پی حکومت نے فرانس سے 36 لڑاکا رافیل طیارے خریدنے کا معاہدے کیا تھا، جس کی مالیت 8 اعشاریہ 7 ارب ڈالر تھی۔ معاہدے میں فرانسیسی کمپنی کی جانب سے بھارتی کمپنی کے ساتھ مل کر بھارت میں طیارے کے پرزے بنانے کے کارخانے لگانے کی شق بھی شامل تھی۔

فرانس کے اس وقت کے صدر فرانسسو اولاندے نے انکشاف کیا کہ رافیل طیاروں کی فروخت میں نریندر مودی نے ارب پتی انیل امبانی کی کمپنی کو معاہدہ دینے کے لیے دباؤ ڈالا۔ نریندر مودی پر آٹھ ارب ڈالر سے زائد کا فائدہ ذاتی دوست کو دینے کا الزام ہے۔

اس بیان کے سامنے کے بعد اپوزیشن پارٹی اور میڈیا نے توپوں کا رخ نریندر مودی کی جانب کردیا، کانگریس کے رہنما راہول گاندھی نے بھارتی وزیراعظم کو کرپٹ قرار دیتے ہوئے نریندر مودی کے استعفیٰ کا مطالبہ کردیا۔

ان کا کہناتھاکہ نریندر مودی نے بھارت کو دھوکا دیا ہے ،اولاندے کا شکریہ ۔۔ پتہ چل گیا کہ وزیراعظم مودی نے دیوالیہ کمپنی کو اربوں ڈالر کی ڈیل لائی ۔

کانگریس صدر نے کہا کہ یہ پہلی بار ہے کہ سابق فرانسیسی صدرنے بھارتی وزیراعظم کو چورکہا،انہیں یقین ہے بھارتی وزیراعظم کرپٹ ہیں،اب تو عوام کی سمجھ میں بھی آگیا ہےکہ دیش کا چوکیدار چور ہے۔

راہول گاندھی نے مزید کہا کہ سابق وزیردفاع نے کہا ہے کہ جب کنٹریکٹ میں تبدیلی ہوئی انہیں نہیں پتا تھا وہ گوا کےبازار میں مچھلی خرید رہےتھے۔

دوسری جانب فرانسسو اولاندے کے بیان کے بعد بھارتی سوشل میڈیا صارفین نے بھی نریندر مودی پر شدید تنقید کی۔ ’میرا وزیراعظم چور ہے‘ بھارت میں ٹویٹر پر ٹاپ ٹرینڈ بن گیا جس پر اب تک 65 ہزار سے زائد ٹوئٹس کی جاچکی ہیں۔

The post رافیل طیارہ اسکینڈل: اپوزیشن کا نریندر مودی سے استعفے کا مطالبہ appeared first on Newsone Urdu.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں