205

Comment on !مائیں سانجھی ہوتی ہیں۔۔۔ مگر by Shirazi

کون اس حقیقت سے انکار کا سوچ یا جرآتکر سکتا ہے کہ مائیں سانجھی ہوتی ہیں اور پھر جہان فانی سے رخصتی پر تو لوگ قا تلوں کی بھی صرف خوبیوں کا تزکرہ کرتے نظر آتے ہیں۔ دنیا داری کے تقاضے تو یقیناً ایسے بیانات اور رویوں سے پورے ہو جاتے ہیں لیکن وہ ذات جو دل و دماغ میں ان کہی گزری ہوئی خیال سے بھی مکمل طور پر واقف ہے وہ ذات پاک نہ تو جہان سے رخصت ہوے شخص کو معاف کرتی ہے نہ یہاں رہ جانے والےجھوٹ کو مخمل کے لحاف میں چھپانے والوں کو کلین چٹ دیتی ہے۔ کیونکہ اس ہستی پاک و عظیم کا وعدہ ہے کہ یوم حشر ہر کوئی اپنے اعمال نامے میں ذرہ برابر کی ہوئی نیکی دیکھے گا اور بعنئہ ذرہ برابر کی ہوئی بدی بی دیکھے گا۔ یہ مرحومہ میری اور میری طرح کروڑوں لوگو کی نظر میں نہایت محترم ہوتیں اگر اپنے شریک حیات سے ذرائع آ مدن پوچھتی ۔ اپنے بچوں کو حرام کی دولت پر پرورش کرنے سے صاف انکار کرتیں۔ ایک دیہات کی گمنام ماں جس نے حلال کی قلیل کمائی پر اپنے بچوں کی نہایت کسمپرسی کی حالت میں پرورش کی وہ ماں موصوفہ سے بدرجہا افضل، قابل ستائش اور ان گنت دعاووں کی حقدار ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں