220

امریکی ریاستوں کو سمندری طوفان ’’فلورنس ‘‘ کا خطرہ، ایمرجنسی نافذ

واشنگٹن : کیٹیگری فور کا سمندری طوفان فلورنس تیزی سے امریکا کی مشرقی ریاستوں کی جانب بڑھنے لگا، امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے بھی ہریکن فلورنس کو ہولناک طوفان قرار دے دیا۔

امریکی موسمیات کے مطابق کیٹیگری فور کا سمندری طوفان فلورنس کل امریکی ریاستوں سے ٹکرائے گا، مختلف علاقوں میں تیز ہوائیں 220 کلومیٹر فئ گھنٹہ کی رفتار سے چل رہی ہیں  جبکہ بارش بھی وقفے وقفے سے ہورہی ہے۔

شمالی اور جنوبی کیرولینا کے 17 لاکھ سے زائد رہائشی کو محفوظ مقام پر منتقل ہونے کی ہدایت کی گئی ہے۔ سیلاب کے خدشہ کے پیش نظر شمالی اور جنوبی کیرولینا میں ایمرجنسی نافذ کر دی گئی ہے۔

امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ اُن کی انتظامیہ ’’کسی بھی ہنگامی صورت حال سے نبردآزما ہونے کے لیے‘‘ تیار ہے۔

ٹرمپ نے کہا کہ درکار رقوم، جو کچھ بھی ہم کر سکتے ہیں، کریں گے۔ وہ آفات سے نمٹنے اور بچاؤ کے کام سے وابستہ ادارے کے اہل کاروں سے بات کر رہے تھے۔

صدر نے کیرولینا اور ورجینیا کی ریاستوں کے ہنگامی صورت حال کے اعلامیے پر دستخط کیے، جس اقدام سے وفاقی رقوم اور وسائل کی فراہمی شروع ہو جائے گی۔ ٹرمپ نے ساحلی علاقوں میں مقیم افراد کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ میرے خیال میں تمام افراد کو نکل جانا چاہیئے۔ ساحل کی پٹی میں صورت حال بہت ہی خراب ہوگی۔

The post امریکی ریاستوں کو سمندری طوفان ’’فلورنس ‘‘ کا خطرہ، ایمرجنسی نافذ appeared first on Newsone Urdu.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں