294

سجاول:بلا امتیاز انسانیت کی خدمت پر یقین رکھتا ہوں۔فیصل ایدھی

فیصل ایدھی نے کہاکہ انسان ذات کی خدمت کرنا ورثہ میں ملی ہے اور بلا امتیازرنگ و نسل کی تفریق کےانسان ذات کی خدمت پر یقین رکھتا ہوں اور صوفیت بھی بلا رنگ و نسل کے انسانیت کی خدمت کا درس دیتی ہے اورصوفیوں کے سرتاج صوفی شاہ عنایت شہید کے اس تخیہ کلام جو کہڑے سو کہائی کے مشہور اس نعرے پر میرے مرحوم والد عبدالستار ایدہی بھی اس عقیدے پر یقین رکہتے تھے اور میں بھی اس عقیدہ پر یقین رکھتا ہوں اور صوفی عزم کا پیروکار ہوں اور اس فلسفہ کو مانتا ہوں ان خیالات کا اظہار فیصل اس نے بٹھورو کے قریب جہوک شریف کی نگری میں صوفیوں کے سرتاج صوفی شاہ عنایت شہید کی مزار پر حاضری بھرنے کے بعد صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا اس نے کہاکہ سندھ بھر کی طرح ضلع ٹھٹھہ میں بھی بااثر افراد نے پولیس کی سرپرستی میں رات کے اندہیرےمیں ایدہی سینٹر پر قبضہ کیاگیا ہے جبکہ ٹھٹھہ میں ایدہی سینٹر 40 سال پرانا ہے۔جب سے پلاٹ اور زمین کے بائو بڑیں تب سے لینڈ مافیہ نے غیر قانونی طور پر جعلی کاغذات بنا کر قبضے کرنا شروع کر دیئے ہیں اس نے کہاکہ ٹھٹھہ میں ایدہی سینٹر میں رات کی تاریخی میں پولیس کا چوروں کی طرح داخل ہوکر توڑ پہوڑ کرنے کی اور قبضہ کی جتنی بھی مزمت کی جائے وہ کم ہے اور سندھ میں فلاحی اداروں پر مافیاز کی جانب سے ناجائز قبضے ہونا حکومت وقت کی ناکامی کا واضع ثبوت ہے اس نے کہاکہ ایدھی تو لاوارثوں کا وارث ہے اور فلاحی ادارے کے سینٹروں پر ناجائز قبضے کرنے والے قوم کے مجرم ہیں جو کسی بھی معافی اور رعایت کے مستحق نہیں ہم حکومت سے مطالبہ کرتے ہیں کہ اس کام میں ملوث عناصر کیخلاف حکومت اپنا اپنا کردار ادا کرے اس نے کہاکہ سجاول ضلع میں بھی ایدہی سینٹر کہولنے کا اعلان کرتا ہوں تمام جلدی سینٹر کہولا جائیگا.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں